198

عالمی بینک نے خیبر پختونخوا حکومت کو پشاور کیلئے 11ارب روپے دینے کی رضا مندی ظاہر کر دی

عالمی بینک نے خیبر پختونخوا حکومت کو پشاور کیلئے 11ارب روپے دینے کی رضا مندی ظاہر کر دی پشاور ڈیجیٹلائزیشن منصوبے کیلئے عالمی بینک آسان اقساط پر 11ارب روپے سے زائد قرض فراہم کریگا جسے صوبائی حکومت معاف کرانے کیلئے پرامید ہے جبکہ عالمی بینک نے پشاور کیلئے ماسٹر پلان تیار کرنے کی یقین دہانی بھی کرائی ہے۔ ذرائع کے مطابق عالمی بینک کے ساتھ مسلسل نشستوں کے بعد محکمہ بلدیات نے عالمی بینک کو پشاور ڈیجیٹلائزیشن منصوبے کیلئے قرض فراہم کرنیکی یقین دہانی کرادی ہے منصوبے کے تحت عالمی بینک قرض کی فراہمی سمیت پشاور کیلئے ماسٹرپلان ترتیب دیگا اسی طرح پشاور میں ریونیو کا نظام کمپیوٹرائزڈ کرنے، بس اڈوں کو ہائی اڈوں کی طرز پر ترتیب دینے، سالڈ اینڈ لکویڈ کچرے کو ٹھکانے لگانے اور اثاثوں کی بہتر استعمال میں لانے کیلئے عالمی بینک اپنی خدمات صوبائی حکومت کو پیش کریگا منصوبے کے تحت کاغذ کے استعمال کو ختم کرنے سمیت کمپیوٹر سسٹم کو استعمال میں لانے کی ترغیب دی جائیگی جبکہ پشاور کی سڑکوں پر ٹریفک مینجمنٹ سسٹم بھی نصب کیا جائیگا۔ذرائع کے مطابق عالمی بینک کے ذیلی ادارے انٹرنیشنل ڈویلپمنٹ ایجنسی (آئی ڈی اے )کی جانب سے صوبائی حکومت کو 8کروڑ ڈالر قرض دیا جائیگا جو 11ارب روپے سے زائد بنتے ہیں مذکورہ قرض آسان اقساط پر فراہم کیا جائیگا جسے صوبائی حکومت معاف کرانے کیلئے پرامید ہے۔

Share this story
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں